Wednesday, October 12, 2011

ہم جنگ یہ جاری رکھیں گے، کفار کو ہم للکاریں گے


یہ جنگ جو ہلال اور صلیب کے درمیان جاری ہے، ایک پرانا تسلسل ہے اور مسلمانوں کے زوال کے بعد بھی کفار اپنے پرانے زخم بھولے نہیں.....جو انہیں مسلمانوں نے عمرؓ، علیؓ، امیر معاویہؓ، خالدؓ، ابو عبیدہؓ، ضرارؓ، سعدؓ بن ابی وقاص اور زنگیؒ و ایوبیؒ کی شکل میں دیے تھے.....  بلکہ مسلمانوں کو کمزور دیکھ کر ان کی زبانیں و کمانیں اور باہر کو نکل آئیں۔ تو اب منتظر رہیں اپنے آباء کی طرح کٹنے، پٹنے اور مرنے کوکہ ایوبیؒ کے روحانی فرزندوں نے ان کے لیے تباہی کا سامان کر رکھا ہے۔
.............................................................................................
آواز: عبد الطیف الحصیری

4Shared Download Link
.............................................................................................
ہم جنگ یہ جاری رکھیں گے
کفار کو ہم للکاریں گے
ہم لے کے رہیں گے حق اپنا
دنیا کو بتا کر دم لیں گے
چن چن کے نشانہ لیں گے
شعلے بن کر آئیں گے ہم
اس ظلم و ستم کی دنیامیں
عدل و انصاف کریں گے ہم
بن جائیں گے ہم پھر ایوبیؒ
باطل پہ گرائیں گے بجلی
ہم بدلہ لیں گے اقصیٰ کا
مثلِ خالدؓ و ضرارؓ و علیؓ
ہر ظالم سے ٹکرائیں گے
ہم اپنا حق لوٹائیں گے
ہر ٹکڑائے ارضِ اسلامی
آزاد کرا کر دم لیں گے
یہ جنگ رہے گی اب جاری
یہ ضرب لگے گی اب کاری
ہر رنگ کا باطل ٹوٹے گا
دیکھی گی یہ دنیا ساری
یہ گلشن پھر چہکے گا
یہ پھول صدا پھر مہکے گا
اک دور چمن پر آئے گا
اسلام کا چہرا چمکے گا

0 تبصرے:

Post a Comment

السلام علیکم
اگر آپ کو یہ مراسلہ اچھا یا برا لگا تو اپنے قیمتی رائے کا اظہار ضرور کیجیے۔
آپ کے مفید مشوروں کو خوش آمدید کہا جائے گا۔